Download (16)

کشمیر کے کئی بالائی علاقوں میں تازہ برفباری

میدانی علاقوں میں بارشیں ،5فروری تک موسم خراب رہنے کی پیش گوئی

سرینگر //وادی کشمیر کے بالائی علاقوں میں پھر ایک بار تازہ برف باری ہوئی ہے جبکہ میدانی علاقوں میں ہلکی بارشیں ہوئی ۔اس دوران محکمہ موسمیات نے وادی کشمیر میں 5فروری تک موسم خشک رہنے کی پیش گوئی کی ہے ۔کشمیر نیوز سروس ( کے این ایس ) کے مطابق حکام نے بدھ کو بتایا کشمیر کے بالائی علاقوں میں کئی علاقوں میں تازہ برف باری ہوئی، جبکہ میدانی علاقوں میں بارش ہوئی۔انہوں نے بتایا کہ گلمرگ، سونمرگ اور پہلگام کے سیاحتی مقامات پر رات بھر تازہ ہلکی سے درمیانی برف باری ہوئی، جو آخری اطلاعات آنے تک جاری تھی۔انہوں نے بتایا کہ اننت ناگ ضلع کے کوکرناگ، کپواڑہ کے ہندواڑہ اور بانڈی پورہ ضلع کے گریز میں بھی برف باری ریکارڈ کی گئی۔عہدیداروں نے مزید کہا کہ جموں و کشمیر کے اونچی علاقوں میں دیگر علاقوں میں تازہ برفباری کی اطلاعات ہیں، بشمول سری نگر-لیہہ ہائی وے پر زوجیلا محور کے ساتھ۔محکمہ موسمیات نے بدھ اور جمعرات کو مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں کئی مقامات پر ہلکی سے درمیانی بارش/برفباری کا امکان ظاہر کیا ہے، کپواڑہ، بانڈی پورہ، بارہمولہ، گاندربل، شوپیاں، کولگام اور اننت ناگ میں چند اونچائیوں پر بھاری برف باری کے امکانات ہیں۔2 فروری کو الگ تھلگ اونچی جگہوں پر بہت ہلکی برفباری کے امکان کے ساتھ موسم بنیادی طور پر خشک رہے گا۔3 سے4 فروری تک کئی مقامات پر ہلکی سے درمیانی بارش یا برفباری کا امکان ہے جس کے بعد 10 فروری تک موسم خشک رہے گا۔40 روزہ سخت سردیوں کا دورانیہ جسے ‘چِلا کلاں’ کہا جاتا ہے منگل کو کشمیر کے میدانی علاقوں میں برف باری اور وادی کے اونچے علاقوں میں معمول سے کم بارش کے ساتھ ختم ہو.جبکہ 40 دن کی مدت کے اختتام پر وادی کے اونچے علاقوں میں ہلکی سے اعتدال پسند برف باری ہوئی، زیادہ تر چِلّہ کلاں – جب برف باری کے امکانات زیادہ سے زیادہ اور اکثر ہوتے ہیں – خشک رہے۔وادی نے اس موسم سرما میں ایک طویل خشک موسم دیکھا، میدانی علاقوں میں کوئی برف باری نہیں ہوئی۔40 دن کی سخت سردیوں کے دوران، ایک سردی کی لہر اس علاقے کو اپنی لپیٹ میں لے لیتی ہے اور درجہ حرارت کافی حد تک گر جاتا ہے جس کی وجہ سے پانی کے ذخائر اور سپلائی پائپوں میں پانی جم جاتا ہے۔کشمیر میں 20 دن کی ‘چِلّہِ خورد’ (چھوٹی سردی) اور 10 دن کی ‘چِلّا-بچہ’ (بچوں کی سردی) کے ساتھ ‘چِلّا کلاں’ کے خاتمے کے بعد بھی سردی کی صورتحال برقرار ہے۔ .اس دوران وادی کشمیر میں رات کے درجہ حرارت میں بہتری دیکھنے میں آئی۔سری نگر شہر، جموں و کشمیر کے موسم گرما کی راجدھانی میں کم سے کم 2.2ڈگری سیلسیس ریکارڈ کیا گیا – جو گزشتہ رات 0.8ڈگری سیلسیس سے زیادہ تھا۔پہلگام میں کم سے کم درجہ حرارت 0.1 ڈگری سیلسیس، قاضی گنڈ میں 0.4 ڈگری سیلسیس، کوکرناگ میں منفی0.2 ڈگری سیلسیس اور کپواڑہ میں 1.3 ڈگری سیلسیس ریکارڈ کیا گیا۔ گلمرگ میں کم سے کم مائنس 3.2ڈگری سیلسیس درج کیا گیا – جو منفی 6 ڈگری سیلسیس سے زیادہ ہے اور وادی کا سب سے سرد مقام تھا۔ جموں و کشمیر کے اضلاع کے لیے برفانی تودے کی وارننگ جاریان علاقوں میں رہنے والے لوگوں کو مشورہ دیا جاتا ہے کہ وہ احتیاطی تدابیر اختیار کریں اور برفانی تودے کے شکار علاقوں میں جانے سے گریز کریں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں