Images (1)

ممکنہ حفاظتی چیلنجوں سے نمٹنے کیلئے مستقبل کی ٹیکنالوجی تیار کرنے کی ضرورت

موجود دور میں فوج لڑنے کیلئے تیاررہے جبکہ وہ مستقبل کے تنازعات کیلئے خود کو تیار کریں/ جنرل انیل چوہان

سرینگر // ممکنہ حفاظتی چیلنجوں سے نمٹنے کیلئے مستقبل کی ٹیکنالوجی تیار کرنے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے چیف آف ڈیفنس اسٹاف جنرل انیل چوہان نے کہا کہ یہ ضروری ہے کہ موجود دور میں فوج لڑنے کیلئے تیار ہوںجبکہ وہ مستقبل کے تنازعات کیلئے خود کو تیار کریں۔نئی دلی میں ایچ اے ایل کے زیر اہتمام ’’ ایویونکس ایکسپو 2023‘‘سے خطاب کرتے ہوئے چیف آف ڈیفنس اسٹاف جنرل انیل چوہان نے کہا کہ انسان بردار اور بغیر پائلٹ کے فوجی اثاثوں کی ٹیم بنانا مستقبل کی جنگ کی تیاری کیلئے نئی نسل کے ایونکس میں ایک اہم پہلو ہوگا اور ہندوستان اس سمت میں ٹھوس کوششیں کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ قوم کو درپیش کسی بھی ممکنہ سکیورٹی چیلنجوں سے نمٹنے کیلئے مستقبل کی ٹیکنالوجیز کو تیار کرنے کی ضرورت پر بھی زور دیا۔ جنرل چوہان نے کہا کہ سرکاری ایرو اسپیس کی بڑی بڑی ہندوستانی ایروناٹکس لمیٹڈ ملک کی فوجی تیاریوں کو تقویت دینے کیلئے نئے ایویونکس اور ہارڈ ویئر تیار کرنے میں سب سے آگے ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم سب ایک تبدیلی اور تبدیلی کے درمیان ہیں۔ یہ نہ صرف جغرافیائی سیاسی تبدیلیاں ہیں بلکہ جیو اکنامک اور تکنیکی تبدیلیاں بھی ہیں۔ انہوں نے کہا’’یہ ضروری ہے کہ جدید فوجیں لڑنے کیلئے تیار ہوں، جب کہ وہ مستقبل کے تنازعات کیلئے خود کو تیار کریں‘‘۔چیف آف ڈیفنس اسٹاف نے کہا کہ انسانوں اور بغیر پائلٹ کے اثاثوں کو اکٹھا کرنا مستقبل کے سیکیورٹی چیلنجوں سے نمٹنے کیلئے اہم ہوگا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں