Download (6)

لوگ گھبرائیں نہیں بلکہ پرسکون رہیں،ٹرانسپورٹروں کی ہڑتال کا کشمیر پر کوئی اثر نہیں پڑے گا/صوبائی کمشنر کشمیر

نئے مجوزہ قانون کے خلاف ٹرانسپورٹروں کے ہڑتال کے چلتے وادی میں پیٹرول پمپوں پر بھاری بھیڑ امڈ آئی
کشمیر میں پٹرول اور ایل پی جی سمیت تقریباً ایک ماہ کیلئے ضروری اشیاء کا کافی ذخیرہ موجود

سرینگر //نئے مجوزہ قانون کے خلاف ملک بھر میں ٹرانسپورٹروں کے ہڑتال کے چلتے وادی کشمیر میں پیٹرول پمپوں پر لوگوں کی بھاری بھیڑ کے بیچ صوبائی کمشنر کشمیر نے کہا کہ وادی کشمیر میں تقریباً ایک ماہ کیلئے پٹرول، مٹی کے تیل اور ایل پی جی کا کافی ذخیرہ موجود ہے اور لوگوں کو گھبرانے کی کوئی ضرورت نہیں ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ ٹرانسپورٹروں کے ہڑتال کا اثر کشمیر پر پڑنے نہیں دیا جائے گا ۔ وادی کشمیر میں منگل کی اعلیٰ الصبح سے ہی پیٹرول پمپوں پر لوگوں کی بھاری بھیڑ دیکھنے کو ملی جو پیٹرول لینے میں مصروف عمل تھے ۔ اس بیچ صوبائی کمشنر کشمیر وجے کمار بد ھوری نے لوگوں پر زور دیا کہ وہ گاڑیوں اور بوتلوں کے ساتھ پٹرول پمپوں پر پہنچ کر خوف و ہراس پیدا نہ کریں اور کہا کہ وادی میں تقریباً ایک ماہ کیلئے پٹرول، مٹی کے تیل اور ایل پی جی کا کافی ذخیرہ موجود ہے۔میڈیا سے بات کرتے ہوئے صوبائی کمشنر وجے کمار بدھوری نے کہا کہ پٹرول پمپوں پر گاڑیوں اور پٹرول کی بوتلوں کے ساتھ جمع ہونے والے لوگ خوف و ہراس کا باعث بنیں گے کیونکہ پٹرول، مٹی کے تیل اور ایل پی جی کی کوئی کمی نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ ہمارے پاس کشمیر میں پٹرول اور ایل پی جی سمیت تقریباً ایک ماہ کیلئے ضروری اشیاء کا کافی ذخیرہ ہے۔انہوں نے کہا کہ لوگ گھبرائیں نہیں بلکہ پرسکون رہیں۔ ٹرانسپورٹروں کی ہڑتال کا کشمیر پر کوئی اثر نہیں پڑے گا۔صوبائی کمشنر نے کہا کہ ٹرانسپورٹرز کے ساتھ مذاکرات جاری ہیں۔ کشمیر کی صوبائی انتظامیہ اس بات کو یقینی بنانے کے لیے پرعزم ہے کہ لوگوں کو سردیوں کے دوران پیٹرول اور ایل پی جی سمیت دیگر اشیائے ضروریہ کی کمی کا سامنا نہ کرنا پڑے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں