170785791

فضا سے فضا میں مارکرنے والے میزائلوں سے لیس درجنوں ” کرار” ڈرون طیارے ایئر ڈیفنس زون میں روانہ کردیئے گئے

ایران// فضا سے فضا میں مار کرنے والے میزائلوں سے لیس درجنوں ” کرار” ڈرون طیارے ملک کے ایئر ڈیفنس زون میں روانہ کردیئے گئے۔

ایک خصوصی فوجی تقریب کے دوران، جس میں اسلامی جمہوریہ ایران کی زمینی فوج کے کمانڈرانچیف جنرل عبدالرحیم موسوی اور خاتم الانبیاء ڈیفنس یونیورسٹی کے سربراہ بریگیڈیئر صباحی فرد نے بھی شرکت کی، فضا سے فضا میں مارکرنے والے میزائلوں سے لیس”کرار” ڈرون طیاروں کو ملک کی سرحدی پٹیوں کی حفاظت کے لئے، ایئر ڈیفنس زون میں روانہ کیا گیا۔

قابل ذکر ہے کہ ” رسول ڈرون پروجکٹ” کے تحت ان ڈرون طیاروں کے وسیع آپریشنل ٹیسٹ کے نو مراحل کامیابی کے ساتھ انجام دیئے گئے ہیں۔

اس پروجکٹ کے تحت مکمل طور پر ایران کے اندر تیار کئے گئے، فضا سے فضا میں اپنے اہداف کو نشانہ بنانے والے جدید ترین ڈرون طیاروں کے انواع واقسام کے سبھی آپریشنل ٹیسٹ کامیاب رہے ہیں جن میں دشمن طیاروں کے ساتھ ہر قسم کی فضائی جنگ اور فضا سے فضا میں اپنے اہداف کو نشانہ بنانے کے تجربات بھی شامل ہیں۔

ٹیکٹیکل ڈیفنس کی صلاحیتوں میں اضافہ، موبائل ایئر ڈیفنس کے جںگی میدان کو تیزی کے ساتھ تبدیل کرنے کی توانائی، فضائی جنگ کی نئی حکمت عملی اور اصول، جنگی مشن کے خطرات میں کمی، ایئر بیسڈ ڈیفنس سسٹم کی جنگی توانائیوں اور انسدادی قوتوں میں اضافہ، جدید ترین ڈرون ٹیکنالوجی کا حصول،آپریشنل رینج میں اضافہ، فضائی دفاع کی گہرائی و گیرائی کی دفاعی بنیاد کی تقویت یعنی دشمن کی ممکنہ فضائی جارحیت کی صورت میں برتری ” رسول ڈرون پروجکٹ” کے جملہ فوائد میں شامل ہے۔

” رسول ڈرون پروجکٹ” نے دنیا میں بغیر پائیلٹ کا ایئر بیسڈ فضائی دفاعی سسٹم متعارف کرایا ہے جو ایرانی قوم، ملک کے نوجوانوں، اور اسلامی جمہوریہ ایران کے طرفداروں کے لئے اپنے آپ پر یقین، خود اعتمادی اورعزت و شرف کے ساتھ سائنس و ٹیکنالوجی کے سبھی میدانوں میں ترقی وپیشرفت کی بلندوبالا چوٹیاں سر کرنے کے لئے قومی عزم جزم کی نوید دیتا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں