4809599

حزب اللہ کی صیہونی رجیم کے ساتھ بالواسطہ مذاکرات کی افواہ کی تردید

لبنان کی حزب اللہ نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے مقبوضہ علاقوں کے ساتھ سرحدی پٹی کے حوالے سے صیہونی حکومت کے ساتھ بالواسطہ مذاکرات کے بارے میں لبنانی اخبار کی افواہ کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے اس کی سختی سے تردید کی ہے۔

الجزیرہ نیوز نیٹ ورک کے حوالے سے خبر دی ہے کہ لبنان کی حزب اللہ کے شعبہ تعلقات عامہ نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے لبنانی اخبار ندا الوطن میں سرحدی تنازعات کے بارے میں لبنان اور صیہونی حکومت کے درمیان بالواسطہ مذاکرات کے حوالے سے جھوٹی خبروں کی اشاعت کی تردید کی ہے۔

حزب اللہ نے مذکورہ خبر کی سختی سے تردید کرتے ہوئے اس بات پر زور دیا ہے کہ اس کیس کو حل کرنے کی مکمل ذمہ داری لبنانی حکومت کی ہے۔

حزب کے بیان میں مذکورہ اخبار میں شائع ہونے والی خبر کو مکمل طور پر جھوٹی اور بے بنیاد قرار دیا گیا ہے۔

خیال رہے کہ صیہونی حکومت نے حال ہی میں لبنان کے خلاف اپنے عنقریب فوجی آپریشن کے بارے میں وسیع پروپیگنڈہ کرنا شروع کیا ہے تاکہ وہ غزہ کی جنگ زدہ محصور قوم کی حمایت میں حزب اللہ کی کارروائیوں میں توسیع کو روک سکے۔

دریں اثنا، صیہونی حکومت کے عسکری ماہرین کا خیال ہے کہ تل ابیب فی الحال غزہ جنگ میں فوجی مقاصد کے حصول میں ناکامی کے باعث لبنان کی حزب اللہ کے ساتھ بیک وقت جنگ میں داخل ہونے کی طاقت نہیں رکھتا۔ یہ ایک ایسا مسئلہ ہے جس کا اعتراف صیہونی فوج کی ریزرو فورس کے سربراہ جنرل اسحاق برک سمیت بہت سے صیہونی عسکری ماہرین کر چکے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں